سورة النازعات - آیت 42

يَسْأَلُونَكَ عَنِ السَّاعَةِ أَيَّانَ مُرْسَاهَا

ترجمہ مکہ - مولانا جوناگڑھی صاحب

لوگ آپ سے قیامت کے واقع ہونے کا وقت دریافت کرتے ہیں (١)

تفسیر تیسیر الرحمن لبیان القرآن - محمد لقمان سلفی صاحب

(١٣) انسانوں کو روز قیامت کی ہولناکی اور ہیبت ناکی کا مزید احساس دلانے کے لئے اللہ تعالیٰ نے نبی کریم (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) کو خطاب کر کے فرمایا ہے کہ منکرین قیامت آپ سیپ وچھتے ہیں کہ آخر وہ بھاری اور مشکل دن کب آئے گا؟ حالانکہ آپ اس کے بارے میں کچھ بھی نہیں جانتے ہیں، اس کی آمد کا وقت توص رف آپ کے رب کو معلوم ہے، اسے ہی معلوم ہے کہ وہس فینہ کب گھاٹ لگے گا، جو لوگوں کو ان کی دنیاوی زندگی سے منتقل کر کے اخروی زندگی میں پہنچا دے گا، سورۃ الاعراف آیت (١٨٧) میں اللہ تعالیٰ نے فرمایا ہے : (یسالونک عن الساعۃ ایان مرسا ھاقل انما علمھا عندربی لایجلیھا لوقتھا الا ھو) ” یہ لوگ آپ سے قیامت کے بارے میں پوچھتے ہیں کہ ہو کب واقع ہوگی آپ فرما دیجیے کہ اس کا علمصرف میرے رب ہی کے پاس ہے اس کے وقت پر اس کو سوا اللہ کے کوئی اور ظاہر نہیں کرے گا۔ “