سورة المعارج - آیت 44

خَاشِعَةً أَبْصَارُهُمْ تَرْهَقُهُمْ ذِلَّةٌ ۚ ذَٰلِكَ الْيَوْمُ الَّذِي كَانُوا يُوعَدُونَ

ترجمہ فہم القرآن - میاں محمد جمیل

ذلت ان پر چھائی ہوگی، یہ وہ دن ہے جس کا ان سے وعدہ کیا جاتا تھا

السعدی تفسیر - عبدالرحمن بن ناصر السعدی

(خاشعۃ ابصارھم ترھقھم ذلۃ) وہ اس طرح کہ ذلت اور اضطراب ان کے دلوں اور عقلوں پر غالب آجائیں گے، ان کی نگاہیں جھگ جائیں گی، تمام حرکات ساکن اور تمام آوازیں منقطع ہوجائیں گے پس یہ حال اور یہ انجام اس دن ہوگا (الذی کانوا یوعدون) جس کا ان کے ساتھ وعدہ کیا گیا تھا، اور اللہ تعالیٰ کے وعدے کا پورا ہونا لازمی امر ہے۔