سورة العاديات - آیت 1

وَالْعَادِيَاتِ ضَبْحًا

ترجمہ فہم القرآن - میاں محمد جمیل

قسم ہے ان گھوڑوں کی جو پھنکارتے ہوئے دوڑتے ہیں

تفسیر مکی - مولانا صلاح الدین یوسف صاحب

١۔ ١ عادیات، عادیۃ کی جمع ہے۔ یہ عدو سے ہے جیسے غزو ہے غازیات کی طرح اس کے واؤ کو بھی یا سے بدل دیا گیا ہے۔ تیز رو گھوڑے۔ ضبح کے معنی بعض کے نزدیک ہانپنا اور بعض کے نزدیک ہنہنانا ہے۔ مراد وہ گھوڑے ہیں جو ہانپتے یا ہنہناتے ہوئے جہاد میں تیزی سے دشمن کی طرف دوڑتے ہیں۔