سنن النسائي - حدیث 5329

كِتَاب الزِّينَةِ التَّغْلِيظُ فِي جَرِّ الْإِزَارِ صحيح أَخْبَرَنَا قُتَيْبَةُ بْنُ سَعِيدٍ قَالَ حَدَّثَنَا اللَّيْثُ عَنْ نَافِعٍ ح وَأَنْبَأَنَا إِسْمَعِيلُ بْنُ مَسْعُودٍ قَالَ حَدَّثَنَا بِشْرٌ قَالَ حَدَّثَنَا عُبَيْدُ اللَّهِ عَنْ نَافِعٍ عَنْ عَبْدِ اللَّهِ قَالَ قَالَ رَسُولُ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ مَنْ جَرَّ ثَوْبَهُ أَوْ قَالَ إِنَّ الَّذِي يَجُرُّ ثَوْبَهُ مِنْ الْخُيَلَاءِ لَمْ يَنْظُرْ اللَّهُ إِلَيْهِ يَوْمَ الْقِيَامَةِ

ترجمہ سنن نسائی - حدیث 5329

کتاب: زینت سے متعلق احکام و مسائل تہبند کو گھسیٹنے پر سخت وعید حضرت عبد اللہ بن عمر ﷜سے روایت ہے کہ رسول اللہ ﷺ نے فرمایا : ’’جوشخص تکبر کے ساتھ اپنا کپڑا زمین پر گھسیٹتا ہے قیامت کے دن اللہ اسے (نظر رحمت سے ) نہیں دیکھے گا۔‘‘ ’’اپنا کپڑا‘‘ گویا ازرا کے علاوہ قمیص یا چادر کو بھی زمین پر گھسیٹنا جائز نہیں جب کہ بعض فقہاء نے یہاں کپڑے سے مراد تہبند ہی لیا ہے ۔ گویا قمیص لٹکا سکتا ہے مگر یہ اس صریح اور واضح حکم شریعت کے خلاف ہے ۔ واللہ اعلم