سنن النسائي - حدیث 4855

كِتَابُ الْقَسَامَةِ بَابُ عَقْلِ الْأَصَابِعِ حسن صحيح أَخْبَرَنِي عَبْدُ اللَّهِ بْنُ الْهَيْثَمِ، قَالَ: حَدَّثَنَا حَجَّاجٌ، قَالَ: حَدَّثَنَا هَمَّامٌ، قَالَ: حَدَّثَنَا حُسَيْنٌ الْمُعَلِّمُ، وَابْنُ جُرَيْجٍ، عَنْ عَمْرِو بْنِ شُعَيْبٍ، عَنْ أَبِيهِ، عَنْ جَدِّهِ، أَنَّ النَّبِيَّ صَلَّى اللهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ قَالَ فِي خُطْبَتِهِ وَهُوَ مُسْنِدٌ ظَهْرَهُ إِلَى الْكَعْبَةِ: «الْأَصَابِعُ سَوَاءٌ»

ترجمہ سنن نسائی - حدیث 4855

کتاب: قسامت ‘قصاص اور دیت سے متعلق احکام و مسائل انگلیوں کی دیت حضرت عمرو بن شعیب اپنے باپ سے، وہ (شعیب) اپنے دادا سے بیان کرتے ہیں کہ نبی اکرمﷺ نے اپنے خطبے میں فرمایا جب کہ آپ نے کعبہ کے ساتھ اپنی پشت کی ٹیک لگا رکھی تھی: ’’تمام انگلیاں (دیت کے لحاظ سے) برابر ہیں۔‘‘