سنن النسائي - حدیث 3245

كِتَابُ النِّكَاحِ خِطْبَةُ الرَّجُلِ إِذَا تَرَكَ الْخَاطِبُ أَوْ أَذِنَ لَهُ صحيح أَخْبَرَنِي إِبْرَاهِيمُ بْنُ الْحَسَنِ قَالَ حَدَّثَنَا الْحَجَّاجُ بْنُ مُحَمَّدٍ قَالَ قَالَ ابْنُ جُرَيْجٍ سَمِعْتُ نَافِعًا يُحَدِّثُ أَنَّ عَبْدَ اللَّهِ بْنَ عُمَرَ كَانَ يَقُولُ نَهَى رَسُولُ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ أَنْ يَبِيعَ بَعْضُكُمْ عَلَى بَيْعِ بَعْضٍ وَلَا يَخْطُبُ الرَّجُلُ عَلَى خِطْبَةِ الرَّجُلِ حَتَّى يَتْرُكَ الْخَاطِبُ قَبْلَهُ أَوْ يَأْذَنَ لَهُ الْخَاطِبُ

ترجمہ سنن نسائی - حدیث 3245

کتاب: نکاح سے متعلق احکام و مسائل جب پہلے پیغٓام والا ارادہ ترک کردے یا اجازت دے دے تو کوئی دوسرا پیغام بھیج سکتا ہے حضرت عبداللہ بن عمر رضی اللہ عنہ فرماتے تھے: رسول اللہﷺ نے منع فرمایا کہ تم میں سے کوئی شخص کسی دوسرے کے سودے پر سودا کرے یا اس کے پیغام نکاح پر پیغام بھیجے‘ حتی کہ پہلے پیغام بھیجنے والا ارادہ ترک کردے یا دوسرے کو اجازت دے دے۔ اگر ایک شحص سودا کررہا ہے تو کسی دوسرے کے لیے جائز نہیں کہ وہ سودا شروع کرے‘ چہ جائیکہ سودا ہوچکا ہو۔