سنن النسائي - حدیث 2383

كِتَابُ الصِّيَامِ النَّهْيُ عَنْ صِيَامِ الدَّهْرِ وَذِكْرُ الِاخْتِلَافِ عَلَى مُطَرِّفِ بْنِ عَبْدِ اللَّهِ فِي الْخَبَرِ فِيهِ صحيح أَخْبَرَنَا مُحَمَّدُ بْنُ الْمُثَنَّى قَالَ حَدَّثَنَا أَبُو دَاوُدَ قَالَ حَدَّثَنَا شُعْبَةُ عَنْ قَتَادَةَ قَالَ سَمِعْتُ مُطَرِّفَ بْنَ عَبْدِ اللَّهِ بْنِ الشِّخِّيرِ يُحَدِّثُ عَنْ أَبِيهِ أَنَّ رَسُولَ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ قَالَ فِي صَوْمِ الدَّهْرِ لَا صَامَ وَلَا أَفْطَرَ

ترجمہ سنن نسائی - حدیث 2383

کتاب: روزے سے متعلق احکام و مسائل ہمیشہ روزہ رکھنے کی ممانعت اور اس بارے میں وارد حدیث (کے بیان ) میں مطرف بن عبد اللہ کے شاگردوں کا اختلاف حضرت عبداللہ بن شخیر رضی اللہ عنہ سے مروی ہے کہ رسول اللہﷺ نے ہمیشہ روزہ رکھنے (والے) کے بارے میں فرمایا: ’’اس نے نہ روزہ رکھا اور نہ چھوڑا۔‘‘ ’’نہ رکھا اور نہ چھوڑا۔‘‘ چھوڑا تو حقیقتاً نہیں، رکھا اس لیے نہیں کہ شریعت کی نافرمانی کی، ثواب نہ ملا گویا نہ رکھا۔