سنن النسائي - حدیث 2123

كِتَابُ الصِّيَامِ ذِكْرُ الِاخْتِلَافِ عَلَى الزُّهْرِيِّ فِي هَذَا الْحَدِيثِ صحيح أَخْبَرَنَا مُحَمَّدُ بْنُ سَلَمَةَ وَالْحَارِثُ بْنُ مِسْكِينٍ قِرَاءَةً عَلَيْهِ وَأَنَا أَسْمَعُ وَاللَّفْظُ لَهُ عَنْ ابْنِ الْقَاسِمِ عَنْ مَالِكٍ عَنْ نَافِعٍ عَنْ ابْنِ عُمَرَ أَنَّ رَسُولَ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ ذَكَرَ رَمَضَانَ فَقَالَ لَا تَصُومُوا حَتَّى تَرَوْا الْهِلَالَ وَلَا تُفْطِرُوا حَتَّى تَرَوْهُ فَإِنْ غُمَّ عَلَيْكُمْ فَاقْدِرُوا لَهُ

ترجمہ سنن نسائی - حدیث 2123

کتاب: روزے سے متعلق احکام و مسائل درج ذیل حدیث میں حضرت زہری کے شاگردوں کے اختلاف کا بیان حضرت ابن عمر رضی اللہ عنہ سے روایت ہے کہ رسول اللہﷺ نے رمضان المبارک کا ذکر فرمایا تو فرمانے لگے: ’’جب تک چاند نہ دیکھ لو، روزے رکھنا شروع نہ کرو۔ اسی طرح روزے رکھنا بند نہ کرو جب تک (شوال کا) چاند نہ دیکھ لو۔ اگر بادل ہوں (اور چاند نظر نہ آئے) تو اس مہینے کو تیس دن کا فرض کرو۔‘‘