Book - حدیث 3800

كِتَابُ الْأَدَبِ بَابُ فَضْلِ الْحَامِدِينَ حسن حَدَّثَنَا عَبْدُ الرَّحْمَنِ بْنُ إِبْرَاهِيمَ الدِّمَشْقِيُّ حَدَّثَنَا مُوسَى بْنُ إِبْرَاهِيمَ بْنِ كَثِيرِ بْنِ بَشِيرِ بْنِ الْفَاكِهِ قَالَ سَمِعْتُ طَلْحَةَ بْنَ خِرَاشٍ ابْنَ عَمِّ جَابِرٍ قَالَ سَمِعْتُ جَابِرَ بْنَ عَبْدِ اللَّهِ يَقُولُ سَمِعْتُ رَسُولَ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ يَقُولُ أَفْضَلُ الذِّكْرِ لَا إِلَهَ إِلَّا اللَّهُ وَأَفْضَلُ الدُّعَاءِ الْحَمْدُ لِلَّهِ

ترجمہ Book - حدیث 3800

کتاب: اخلاق وآداب سے متعلق احکام ومسائل باب: اللہ کی تعریف کرنے والوں کی فضیلت حضرت جابر بن عبداللہ ؓ سے روایت ہے ، رسول اللہ ﷺ نے فرمایا: سب سے افضل ذکر [لَااِلٰہَ اِلاَّ اللہُ]ہے، اور سب سے افضل دعا[اَلۡحَمۡدُ لِلہِ]ہے۔ ۱ ۔ تمام مسنون اذکار رحمت و برکت کا باعث ہیں، لیکن (لا اله الا الله ) کا ثواب اور اس کی برکات سب سے زیادہ ہیں۔ ۲۔ اللہ کی تعریف بھی ایک دعا ہے کیونکہ انسان ثواب کی نیت سے نیکی اور ذکر کرتا ہے، اس طرح اسے مطلوب (ثواب) حاصل ہو جاتا ہے۔ ۳۔ ایک مطلب یہ بھی ہے کہ سب سے افضل دعا سورۂ فاتحہ ہے جسے حدیث (الحمد لله) سے بیان کیا گیا ہے۔ اس میں اللہ کی تعریف بھی ہے اور اس سے ہدایت ، انعام اور مدد کی دعا بھی۔