Book - حدیث 3319

كِتَابُ الْأَطْعِمَةِ بَابُ الزَّيْتِ صحیح حَدَّثَنَا الْحُسَيْنُ بْنُ مَهْدِيٍّ قَالَ: حَدَّثَنَا عَبْدُ الرَّزَّاقِ قَالَ: أَنْبَأَنَا مَعْمَرٌ، عَنْ زَيْدِ بْنِ أَسْلَمَ، عَنْ أَبِيهِ، عَنْ عُمَرَ، قَالَ: قَالَ رَسُولُ اللَّهِ صَلَّى اللهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ: «ائْتَدِمُوا بِالزَّيْتِ، وَادَّهِنُوا بِهِ، فَإِنَّهُ مِنْ شَجَرَةٍ مُبَارَكَةٍ»

ترجمہ Book - حدیث 3319

کتاب: کھانوں سے متعلق احکام ومسائل باب: زیتون کا تیل حضرت عمر ؓ سے روایت ہے‘رسول اللہﷺ نے فرمایا:’’زیتون کا تیل سالن کے طور پر استعمال کرو اور اسے(سر اور بدن میں )لگاؤ۔یہ مبارک درخت سے حاصل ہوتا ہے۔‘‘ 1۔ دودھ سے حاصل ہونے والے گھی یا جانوروں کی چربی کی نسبت نباتاتی تیل زیادہ مفید ہے ۔ 2۔ نباتاتی تیلوں میں زیتون کاتیل سب سے عمدہ اور مفید ہے ۔ 3۔ زیتون کے درخت کواللہ تعالیٰ نے قرآن مجید مبارک درخت فرمایا ہے ۔ (سورۂ نور: آیت 35)