Book - حدیث 1688

كِتَاب الصِّيَامِ بَابُ مَا جَاءَ فِي الْمُبَاشَرَةِ لِلصَّائِمِ صحیح حَدَّثَنَا مُحَمَّدُ بْنُ خَالِدِ بْنِ عَبْدِ اللَّهِ الْوَاسِطِيُّ حَدَّثَنَا أَبِي عَنْ عَطَاءِ بْنِ السَّائِبِ عَنْ سَعِيدِ بْنِ جُبَيْرٍ عَنْ ابْنِ عَبَّاسٍ قَالَ رُخِّصَ لِلْكَبِيرِ الصَّائِمِ فِي الْمُبَاشَرَةِ وَكُرِهَ لِلشَّابِّ

ترجمہ Book - حدیث 1688

کتاب: روزوں کی اہمیت وفضیلت باب: روزے کی حالت میں بیوی سے مباشرت کرنے کا بیان عبداللہ بن عباس ؓ سے روایت ہے انہوں نے فرمایا: بوڑھے روزے دار کو بیوی سے مباشرت( معانقہ وغیرہ) کی اجازت ہے، اور جوان کےلئے مکروہ ہے۔ 1۔بوڑھے اور جوان کا یہ فرق سنن بہیقی میں رسول اللہﷺ سے بھی مروی ہے۔(دیکھئے۔4/232) ۔2۔عام طور پر بوڑھے کو اپنے آپ پر جو قابو ہوتا ہے جوان آدمی کو نہیں ہوتا۔اس لئے مسئلہ اس طرح بیان فرمایا گیا۔اگر کوئی شخص زیادہ عمر کاہونے کے باوجود جوانوں کی طرح قوت اور جوش رکھتا ہے۔تو اسے جوان کیطرح پرہیز کرنا چاہیے۔اور اگر کوئی جوان اسطرح کا جوش نہیں رکھتا بلکہ اپنے آپ پر قابو رکھ سکتا ہے۔تو اس کے لئے بوڑھے کیطرح اجازت ہوگی۔