الادب المفرد - حدیث 849

كِتَابُ بَابُ الْكُنْيَةِ قَبْلَ أَنْ يُولَدَ لَهُ حَدَّثَنَا عَارِمٌ قَالَ: حَدَّثَنَا سُلَيْمَانُ الْأَعْمَشُ، عَنْ إِبْرَاهِيمَ، عَنْ عَلْقَمَةَ قَالَ: كَنَّانِي عَبْدُ اللَّهِ قَبْلَ أَنْ يُولَدَ لِي

ترجمہ الادب المفرد - حدیث 849

کتاب اولاد کی پیدائش سے پہلے اپنی کنیت رکھنا ابراہیم نخعی رحمہ اللہ سے روایت ہے، وہ کہتے ہیں کہ علقمہ رحمہ اللہ نے فرمایا:میرے ہاں اولاد پیدا ہونے سے پہلے سیدنا عبداللہ رضی اللہ عنہ نے میری کنیت رکھی۔
تشریح : اس سے معلوم ہوا کہ اولاد کی پیدائش سے پہلے بھی کنیت رکھنا جائز ہے۔ ضروری نہیں کہ صرف وہی شخص کنیت رکھے جس کی اولاد ہو بلکہ بے اولاد شخص بھی کنیت رکھ سکتا ہے۔
تخریج : صحیح:أخرجه ابن أبي شیبة:۲۶۲۸۸۔ والدولبي في الکنی:۸۲ ۶۵۰۔ اس سے معلوم ہوا کہ اولاد کی پیدائش سے پہلے بھی کنیت رکھنا جائز ہے۔ ضروری نہیں کہ صرف وہی شخص کنیت رکھے جس کی اولاد ہو بلکہ بے اولاد شخص بھی کنیت رکھ سکتا ہے۔