الادب المفرد - حدیث 413

كِتَابُ بَابُ الشَّحْنَاءِ حَدَّثَنَا سَعِيدُ بْنُ سُلَيْمَانَ قَالَ: حَدَّثَنَا أَبُو شِهَابٍ، عَنْ كَثِيرٍ، عَنْ أَبِي فَزَارَةَ، عَنْ يَزِيدَ بْنِ الْأَصَمِّ، عَنِ ابْنِ عَبَّاسٍ، عَنِ النَّبِيِّ صَلَّى اللهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ قَالَ: ((ثَلَاثٌ مَنْ لَمْ يَكُنَّ فِيهِ، غُفِرَ لَهُ مَا سِوَاهُ لِمَنْ شَاءَ، مَنْ مَاتَ لَا يُشْرِكُ بِاللَّهِ شَيْئًا، وَلَمْ يَكُنْ سَاحِرًا يَتَّبِعُ السَّحَرَةَ، وَلَمْ يَحْقِدْ عَلَى أَخِيهِ))

ترجمہ الادب المفرد - حدیث 413

کتاب دشمنی کا بیان حضرت ابن عباس رضی اللہ عنہما سے روایت ہے، نبی صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا:’’تین گناہ جس میں نہ ہوں باقی گناہ اللہ تعالیٰ جس کے چاہے معاف فرما دے گا:جو اس حال میں فوت ہو کہ اللہ کے ساتھ شرک نہ کرتا ہو۔ وہ جادوگر نہ ہو جو جادوگروں کی پیروی کرتا ہے اور اپنے بھائی کے بارے میں کینہ نہ رکھتا ہو۔‘‘
تشریح : اس روایت کی سند ضعیف ہے۔
تخریج : ضعیف:أخرجه عبد بن حمید:۶۸۵۔ والطبراني في الکبیر:۱۲؍ ۱۸۸۔ وأبو نعیم في الحلیة :۴؍ ۱۰۰۔ والبیهقي في شعب الایمان:۶۶۱۴۔ انظر الضعیفة:۲۸۳۱۔ اس روایت کی سند ضعیف ہے۔