الادب المفرد - حدیث 1018

كِتَابُ بَابُ لَا يُسَلَّمُ عَلَى فَاسِقٍ حَدَّثَنَا مُحَمَّدُ بْنُ مَحْبُوبٍ، وَمُعَلَّى، وَعَارِمٌ، قَالُوا: حَدَّثَنَا أَبُو عَوَانَةَ، عَنْ قَتَادَةَ، عَنِ الْحَسَنِ قَالَ: لَيْسَ بَيْنَكَ وَبَيْنَ الْفَاسِقِ حُرْمَةٌ

ترجمہ الادب المفرد - حدیث 1018

کتاب فاسق کو سلام نہ کہا جائے حسن بصری رحمہ اللہ سے روایت ہے، انہوں نے فرمایا:تمہارے اور فاسق کے درمیان کوئی احترام نہیں۔
تشریح : مطلب یہ ہے کہ سلام باہم ادب و احترام پر دلالت کرتا ہے۔ جب فاسق کا احترام نہیں تو اسے سلام کہنے کی بھی ضرورت نہیں۔
تخریج : صحیح:تفرد به المصنف۔ مطلب یہ ہے کہ سلام باہم ادب و احترام پر دلالت کرتا ہے۔ جب فاسق کا احترام نہیں تو اسے سلام کہنے کی بھی ضرورت نہیں۔