Book - حدیث 5199

كِتَابُ السَّلَامِ بَابُ مَنْ أَوْلَى بِالسَّلَامِ؟ صحیح حَدَّثَنَا يَحْيَى بْنُ حَبِيبِ بْنِ عَرَبِيٍّ أَخْبَرَنَا رَوْحٌ حَدَّثَنَا ابْنُ جُرَيْجٍ قَالَ أَخْبَرَنِي زِيَادٌ أَنَّ ثَابِتًا مَوْلَى عَبْدِ الرَّحْمَنِ بْنِ زَيْدٍ أَخْبَرَهُ أَنَّهُ سَمِعَ أَبَا هُرَيْرَةَ يَقُولُ قَالَ رَسُولُ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ يُسَلِّمُ الرَّاكِبُ عَلَى الْمَاشِي ثُمَّ ذَكَرَ الْحَدِيثَ

ترجمہ Book - حدیث 5199

کتاب: السلام علیکم کہنے کے آداب باب: پہلے سلام کون کہے؟ سیدنا ابوہریرہ ؓ فرماتے تھے کہ رسول اللہ ﷺ نے فرمایا ” سوار آدمی پیدل کو سلام کہے ۔ “ پھر مذکورہ حدیث بیان کی ۔ دین اسلام ،ادب واحترام کا دین ہے اس میں ہر عمل کا ادب اور طریقہ بیان کیا گیا ہے ۔ تمام اہل ایمان کو ان پر کار بند رہنا چاہیے ۔