Book - حدیث 5072

كِتَابُ النَّومِ بَابُ مَا يَقُولُ إِذَا أَصْبَحَ ضعیف حَدَّثَنَا حَفْصُ بْنُ عُمَرَ، حَدَّثَنَا شُعْبَةُ، عَنْ أَبِي عَقِيلٍ، عَنْ سَابِقِ بْنِ نَاجِيَةَ، عَنْ أَبِي سَلَّامٍ, أَنَّهُ كَانَ فِي مَسْجِدِ حِمْصَ، فَمَرَّ بِهِ رَجُلٌ، فَقَالُوا: هَذَا خَدَمَ النَّبِيَّ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ، فَقَامَ إِلَيْهِ، فَقَالَ: حَدِّثْنِي بِحَدِيثٍ سَمِعْتَهُ مِنْ رَسُولِ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ، لَمْ يَتَدَاوَلْهُ بَيْنَكَ وَبَيْنَهُ الرِّجَالُ؟! قَالَ: سَمِعْتُ رَسُولَ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ يَقُولُ: >مَنْ قَالَ إِذَا أَصْبَحَ وَإِذَا أَمْسَى: رَضِينَا بِاللَّهِ رَبًّا، وَبِالْإِسْلَامِ دِينًا، وَبِمُحَمَّدٍ رَسُولًا, إِلَّا كَانَ حَقًّا عَلَى اللَّهِ أَنْ يُرْضِيَهُ<.

ترجمہ Book - حدیث 5072

كتاب: سونے سے متعلق احکام ومسائل باب: صبح کے وقت کی دعائیں جناب ابوسلام ( ممطور الحبشی ) حمص کی مسجد میں بیٹھے ہوئے تھے کہ ان کے پاس سے ایک شخص گزرا ۔ لوگوں نے بتایا کہ یہ آدمی نبی کریم ﷺ کا خادم رہا ہے ۔ تو ابوسلام اس کی طرف اٹھ کر گئے اور کہا : مجھے ایسی حدیث بیان کیجئیے جو آپ نے رسول اللہ ﷺ سے سنی ہو اور وہ صرف آپ کو بتائی ہو ، عام لوگوں سے نہ کہی ہو ۔ تو انہوں نے کہا : میں نے رسول اللہ ﷺ کو سنا آپ ﷺ فرماتے تھے ” جو شخص صبح یا شام کو یہ پڑھ لیا کرے «رضينا بالله ربا وبالإسلام دينا وبمحمد رسولا» ” ہم اس بات پر راضی ہیں کہ اللہ ہمارا رب ، اسلام ہمارا دین اور محمد ( ﷺ ) ہمارے رسول ہیں ۔ “ تو اللہ پر یہ حق ہو گا کہ وہ اسے راضی کر دے ۔ “ اس حدیث میں مذکوردعا سنن ابودائود۔کتاب الوتر حدیث 1529 میں بھی گزر چکی ہے تفصیل کےلئے ملاحظہ ہو۔