Book - حدیث 4825

كِتَابُ الْأَدَبِ بَابٌ فِي التَّحَلُّقِ صحیح حَدَّثَنَا مُحَمَّدُ بْنُ جَعْفَرٍ الْوَرَكَانِيُّ وَهَنَّادٌ أَنَّ شَرِيكًا أَخْبَرَهُمْ، عَنْ سِمَاكٍ، عَنْ جَابِرِ بْنِ سَمُرَةَ، قَالَ: كُنَّا إِذَا أَتَيْنَا النَّبِيَّ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ, جَلَسَ أَحَدُنَا حَيْثُ يَنْتَهِي.

ترجمہ Book - حدیث 4825

کتاب: آداب و اخلاق کا بیان باب: مختلف حلقے بنا کر بیٹھنے کا بیان سیدنا جابر بن سمرہ ؓ سے روایت ہے کہ ہم جب نبی کریم ﷺ کی مجلس میں آتے تھے تو جہاں مجلس پہنچی ہوتی وہیں ( آخر میں ) بیٹھ جایا کرتے تھے ۔ یہ بات انتہائی معیوب ہوتی ہے کہ انسان دیر سے آئے اور پہلے سے بیٹھے ہو ئے لوگوں کی گردنیں پھلانگتا ہوا آگے جگہ لینے کی کوشش کرے۔ ہاں اگر پہلے آنے والوں نے مجلس کا ادب ملحوظ نہ رکھا ہو کہ آگے جگہ خالی چھوڑ دی ہو اور راستے میں بیٹھ گئے ہوں تو گردنیں پھلانگنا جائز ہو گا۔ کیونکہ انھوں نے از خود اپنا وقار ضائع کیا ہو تا ہے 2) یہ روایت ہمارے فاضل محقق کے نزدیک سندََا ضعیف ہے، تاہم معنوی طور پر یہ روایت صحیح ہے جیسا کہ ہمارے فاضل محقق نے تحقیق و تخریج میں اس بات کی وضاحت کی ہے علاوہ ازیں شیخ البانی ؒ نے بھی اسکو صحیح قرار دیا ہے۔