Book - حدیث 4366

كِتَابُ الْحُدُودِ بَابُ مَا جَاءَ فِي الْمُحَارَبَةِ صحیح حَدَّثَنَا مُحَمَّدُ بْنُ الصَّبَّاحِ بْنِ سُفْيَانَ قَالَ، أَخْبَرَنَا ح، وحَدَّثَنَا عَمْرُو بْنُ عُثْمَانَ، حَدَّثَنَا الْوَلِيدُ عَنِ الْأَوْزَاعِيِّ، عَنْ يَحْيَى يَعْنِي ابْنَ أَبِي كَثِيرٍ، عَنْ أَبِي قِلَابَةَ، عَنْ أَنَسِ بْنِ مَالِكٍ بِهَذَا الْحَدِيثِ... قَالَ فِيهِ: فَبَعَثَ رَسُولُ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ فِي طَلَبِهِمْ قَافَةً، فَأُتِيَ بِهِمْ، قَالَ: فَأَنْزَلَ اللَّهُ تَبَارَكَ وَتَعَالَى فِي ذَلِكَ: {إِنَّمَا جَزَاءُ الَّذِينَ يُحَارِبُونَ اللَّهَ وَرَسُولَهُ وَيَسْعَوْنَ فِي الْأَرْضِ فَسَادًا...}[المائدة: 33], الْآيَةَ.

ترجمہ Book - حدیث 4366

کتاب: حدود اور تعزیرات کا بیان باب: ڈاکہ ، رہزنی اور لوٹ مار کا بیان جناب ابوقلابہ نے سیدنا انس بن مالک ؓ سے یہ حدیث روایت کی ہے ، اس میں ہے کہ رسول اللہ ﷺ نے ان کے تعاقب میں مخبروں ( کھوجیوں ) کو بھیجا تو انہیں لے آیا گیا ‘ چنانچہ اللہ تعالیٰ نے اسی سلسلے میں یہ آیت مبارکہ نازل فرمائی «إن جزاء الذين يحاربون الله ورسوله ويسعون في الأرض فسادا» ” جو لوگ اللہ اور اس کے رسول سے لڑیں اور زمین میں فساد پھیلائیں ( ان کی سزا یہ ہے کہ انہیں قتل کر دیا جائے یا سولی چڑھا دیے جائیں یا الٹی اطراف سے ان کے ہاتھ پاؤں کاٹ دئیے جائیں یا انہیں جلا وطن کر دیا جائے ۔ “ )