Book - حدیث 390

كِتَابُ الطَّهَارَةِ بَابُ الْبُصَاقِ يُصِيبُ الثَّوْبَ صحیح حَدَّثَنَا مُوسَى بْنُ إِسْمَعِيلَ قَالَ حَدَّثَنَا حَمَّادٌ عَنْ حُمَيْدٍ عَنْ أَنَسٍ عَنْ النَّبِيِّ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ بِمِثْلِهِ

ترجمہ Book - حدیث 390

کتاب: طہارت کے مسائل باب: کپڑے کو تھوک لگ جائے تو...؟ حمید نے ، سیدنا انس ؓ سے انہوں نے نبی کریم ﷺ سے اسی کے مثل روایت کیا ۔ (1) انسا ن کاتھوک پاک ہے۔اسی طرح بلغمی مادہ ناک کی آلائش بھی پاک ہے۔لیکن کپڑے پرظاہر لگی نظر آتی ہوتو بری لگتی ہے۔اس لیے نظافت کےطور پر صاف کرلینی چاہیے ۔ حالت نماز میں تھوکنے کی ضرورت محسوس ہویا ناک صاف کرنے کی ضرورت ہوتو اس کامسنون طریقہ یہ ہےکہ انسان اپنے کپڑے ( رومال وغیرہ) میں تھوگ کرا س کپڑے کومسل دے۔ تھوک اور بلغم وغیرہ کومنہ کےاندر ہی اندر رکھ کر نماز ختم ہونے کا انتظار نہ کرتا رہے کہ اس طرح نماز کےخشوع خضوع میں خلل واقع ہوتا ہے۔ واللہ اعلم .