Book - حدیث 3346

كِتَابُ الْبُيُوعِ بَابٌ فِي حُسْنِ الْقَضَاءِ صحیح حَدَّثَنَا الْقَعْنَبِيُّ عَنْ مَالِكٍ عَنْ زَيْدِ بْنِ أَسْلَمَ عَنْ عَطَاءِ بْنِ يَسَارٍ عَنْ أَبِي رَافِعٍ قَالَ اسْتَسْلَفَ رَسُولُ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ بَكْرًا فَجَاءَتْهُ إِبِلٌ مِنْ الصَّدَقَةِ فَأَمَرَنِي أَنْ أَقْضِيَ الرَّجُلَ بَكْرَهُ فَقُلْتُ لَمْ أَجِدْ فِي الْإِبِلِ إِلَّا جَمَلًا خِيَارًا رَبَاعِيًا فَقَالَ النَّبِيُّ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ أَعْطِهِ إِيَّاهُ فَإِنَّ خِيَارَ النَّاسِ أَحْسَنُهُمْ قَضَاءً

ترجمہ Book - حدیث 3346

کتاب: خرید و فروخت کے احکام و مسائل باب: ادائیگی میں عمدگی کے بارے میں سیدنا ابورافع ؓ بیان کرتے ہیں کہ رسول اللہ ﷺ نے ( ایک بار ) ایک جوان اونٹ ادھار لیا ، پھر آپ ﷺ کے پاس صدقے کے اونٹ آ گئے ۔ آپ ﷺ نے مجھ سے فرمایا کہ اس کا ( جوان ) اونٹ ادا کر دوں ۔ میں نے عرض کیا گلے میں اس کے اونٹ سے عمدہ رباعی اونٹ ہے ۔ نبی کریم ﷺ نے فرمایا ” اسے وہی دے دو ، لوگوں میں بہترین وہی ہوتے ہیں جو ادائیگی میں بہترین ہوں ۔“