Book - حدیث 2997

كِتَابُ الْخَرَاجِ وَالْإِمَارَةِ وَالْفَيْءِ بَابُ مَا جَاءَ فِي سَهْمِ الصَّفِيِّ صحيح م لكن قوله وأحسبه فيه نظر لأنه بنى بها في سد الصهباء حَدَّثَنَا مُحَمَّدُ بْنُ خَلَّادٍ الْبَاهِلِيُّ حَدَّثَنَا بَهْزُ بْنُ أَسَدٍ حَدَّثَنَا حَمَّادٌ أَخْبَرَنَا ثَابِتٌ عَنْ أَنَسٍ قَالَ وَقَعَ فِي سَهْمِ دِحْيَةَ جَارِيَةٌ جَمِيلَةٌ فَاشْتَرَاهَا رَسُولُ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ بِسَبْعَةِ أَرْؤُسٍ ثُمَّ دَفَعَهَا إِلَى أُمِّ سُلَيْمٍ تَصْنَعُهَا وَتُهَيِّئُهَا قَالَ حَمَّادٌ وَأَحْسَبُهُ قَالَ وَتَعْتَدُّ فِي بَيْتِهَا صَفِيَّةُ بِنْتُ حُيَيٍّ

ترجمہ Book - حدیث 2997

کتاب: محصورات اراضی اور امارت سے متعلق احکام و مسائل باب: صفی کے احکام و مسائل سیدنا انس ؓ کا بیان ہے کہ سیدنا دحیہ کلبی ؓ کے حصے میں ایک بہت ہی خوبصورت لونڈی آئی ‘ تو رسول اللہ ﷺ نے اس کو سات غلام دے کر خرید لیا ۔ پھر آپ ﷺ نے اسے ام سلیم ؓا کے حوالے کیا تاکہ اسے بنائیں سنواریں اور بطور دلہن تیار کریں ۔ حماد کہتے ہیں اور میرا خیال ہے کہ آپ ﷺ نے فرمایا یہ ام سلیم کے ہاں عدت پوری کر لے اور یہ صفیہ بنت حیی تھیں ۔