Book - حدیث 2716

كِتَابُ الْجِهَادِ بَابُ النَّهْيِ عَنْ السَّتْرِ عَلَى مَنْ غَلَّ ضعیف حَدَّثَنَا مُحَمَّدُ بْنُ دَاوُدَ بْنِ سُفْيَانَ، قَالَ:، حَدَّثَنَا يَحْيَى بْنُ حَسَّانَ، قَالَ:، حَدَّثَنَا سُلَيْمَانُ بْنُ مُوسَى أَبُو دَاوُدَ، قَالَ:، حَدَّثَنَا جَعْفَرُ بْنُ سَعْدِ بْنِ سَمُرَةَ بْنِ جُنْدُبٍ، حَدَّثَنِي خُبَيْبُ بْنُ سُلَيْمَانَ، عَنْ أَبِيهِ سُلَيْمَانَ بْنِ سَمُرَةَ، عَنْ سَمُرَةَ بْنِ جُنْدُبٍ، قَالَ: أَمَّا بَعْدُ، وَكَانَ رَسُولُ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ يَقُولُ: >مَنْ كَتَمَ غَالًّا فَإِنَّهُ مِثْلُهُ<.

ترجمہ Book - حدیث 2716

کتاب: جہاد کے مسائل باب: ( مال غنیمت کے ) خائن کی خیانت پر پردہ ڈالنا ممنوع ہے سیدنا سمرہ بن جندب ؓ نے ( خطبے میں بیان کیا ) امابعد ! اور رسول اللہ ﷺ فرمایا کرتے تھے ” جس نے غنیمت میں کسی خائن کی خیانت پر پردہ ڈالا تو وہ بھی اسی خائن کی طرح ہے ۔ “ یہ حدیث گو ضعیف ہے۔لیکن معناً صحیح ہے۔یعنی یہ بات جو اس میں کہی گئی ہے ۔وہ دوسرے دلائل کی رو سے صحیح ہے۔