Book - حدیث 1964

كِتَابُ الْمَنَاسِكِ بَابُ الصَّلَاةِ بِمِنًى حسن حَدَّثَنَا مُوسَى بْنُ إِسْمَعِيلَ حَدَّثَنَا حَمَّادٌ عَنْ أَيُّوبَ عَنْ الزُّهْرِيِّ أَنَّ عُثْمَانَ بْنَ عَفَّانَ أَتَمَّ الصَّلَاةَ بِمِنًى مِنْ أَجْلِ الْأَعْرَابِ لِأَنَّهُمْ كَثُرُوا عَامَئِذٍ فَصَلَّى بِالنَّاسِ أَرْبَعًا لِيُعَلِّمَهُمْ أَنَّ الصَّلَاةَ أَرْبَعٌ

ترجمہ Book - حدیث 1964

کتاب: اعمال حج اور اس کے احکام و مسائل باب: منیٰ میں نمازیں ( قصر یا اتمام ) امام زہری ؓ سے روایت ہے کہ سیدنا عثمان ؓ نے منٰی میں بدوی لوگوں کی وجہ سے پوری نماز پڑھی تھی کیونکہ وہ اس سال بہت کثیر تعداد میں آئے تھے تو انہوں نے لوگوں کو چار رکعتیں پڑھائیں تاکہ ان بدویوں کو معلوم رہے کہ نماز چار رکعات ہے ۔ یہ چاروں آثار ضعیف ہے ۔ اس لیے حضرت عثمان کےمنی ٰ میں پوری نماز پڑھنے کی وجہ صرف مسافر کے لیے قصر کی بجائے پوری نماز پڑھنے کا جواز ہے ۔ اس کے علاوہ اور کوئی وجہ نہیں ۔