Book - حدیث 1268

كِتَابُ التَّطَوُّعِ بَابُ مَنْ فَاتَتْهُ مَتَى يَقْضِيهَا صحيح لغيره وقوله جدهم زيدا خطأ والصواب جدهم قيس حَدَّثَنَا حَامِدُ بْنُ يَحْيَى الْبَلْخِيُّ، قَالَ: قَالَ سُفْيَانُ: كَانَ عَطَاءُ بْنُ أَبِي رَبَاحٍ يُحَدِّثُ بِهَذَا الْحَدِيثِ، عَنْ سَعْدِ بْنِ سَعِيدٍ قَالَ أَبو دَاود: وَرَوَى عَبْدُ رَبِّهِ وَيَحْيَى ابْنَا سَعِيدٍ هَذَا الْحَدِيثَ مُرْسَلًا أَنَّ جَدَّهُمْ صَلَّى مَعَ النَّبِيِّ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ,بِهَذِهِ الْقِصَّةِ.

ترجمہ Book - حدیث 1268

کتاب: نوافل اور سنتوں کے احکام ومسائل باب: فجر کی سنتیں رہ جائیں تو کب ادا کرے؟ حامد بن یحییٰ بلخی نے کہا کہ سفیان نے کہا : عطاء بن ابی رباح یہ حدیث سعد بن سعید سے بیان کرتے تھے ۔ امام ابوداؤد ؓ نے کہا کہ عبدربہ اور یحییٰ ، ابنائے سعید نے یہ حدیث مرسل روایت کی کہ ان کے دادا زید نے نبی کریم ﷺ کے ساتھ نماز پڑھی اور یہ قصہ بیان کیا . فائدہ :اس میں یحیی او رعبدربہ کے دادا کانام زید بتلایا گیا ہے ’ یہ صحیح نہیں ہے ۔ بلکہ دادا کانام ‘‘قیس ’’ ہے ’ جیسا کہ حدیث 1267 میں ہے۔(شیخ البانی ﷫ )