Book - حدیث 1033

کِتَابُ تَفْرِيعِ اسْتِفْتَاحِ الصَّلَاةِ بَابُ مَنْ قَالَ بَعْدَ التَّسْلِيمِ ضعیف حَدَّثَنَا أَحْمَدُ بْنُ إِبْرَاهِيمَ، حَدَّثَنَا حَجَّاجٌ عَنِ ابْنِ جُرَيْجٍ، أَخْبَرَنِي عَبْدُ اللَّهِ بْنُ مُسَافِعٍ، أَنَّ مُصْعَبَ بْنَ شَيْبَةَ أَخْبَرَهُ، عَنْ عُتْبَةَ بْنِ مُحَمَّدِ بْنِ الْحَارِثِ، عَنْ عَبْدِ اللَّهِ بْنِ جَعْفَرٍ، أَنَّ رَسُولَ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ قَالَ: >مَنْ شَكَّ فِي صَلَاتِهِ, فَلْيَسْجُدْ سَجْدَتَيْنِ بَعْدَمَا يُسَلِّمُ.

ترجمہ Book - حدیث 1033

کتاب: نماز شروع کرنے کے احکام ومسائل باب: ان حضرات کی دلیل جو کہتے ہیں کہ سلام کے بعد سجدے کرے سیدنا عبداللہ بن جعفر ؓ بیان کرتے ہیں کہ رسول اللہ ﷺ نے فرمایا ” جسے اپنی نماز میں شک ہو ، اسے چاہیئے کہ سلام کے بعد دو سجدے کرے ۔ “ یعنی اپنی اپنی رکعتیں پوری کرکے آخر میں دو سجدے کر لے۔اور اس حدیث سے معلوم ہوا کہ سہو کے سجدے سلام پھیرنے کے بعد بھی کئے جاسکتے ہیں۔تاہم یہ روایت دیگر محققین نے نزدیک ضعیفہے۔(دیکھئے الموسوعۃ الحدیثیہ۔مسند احمد محقق 276/3)