کتاب: احکام و مسائل خواتین کا انسائیکلوپیڈیا - صفحہ 262
"جس نے امام کے ساتھ ایک رکعت پا لی وہ اس کے ساتھ ایک اور ملا لے۔"[1] ان حضرات کا استدلال رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کے فرمان سے ہے: "مَنْ أَدْرَكَ رَكْعَةً مِنَ الصَّلاةِ،فَقَدْ أَدْرَكَ الصَّلاةَ" "جس نے نماز کی ایک رکعت پا لی اس نے نماز پا لی۔" [2] یہ حضرت ابوہریرہ رضی اللہ عنہ سے مروی ہے۔اور صحیحین میں یہ بھی آیا ہے کہ:من أدرك ركعة أدرك الصلاة "جس نے ایک رکعت پا لی،اس نے نماز پا لی۔" [3] ان روایات کا مفہوم مخالف (بدلیل خطاب) یہ ہے کہ جو ایک رکعت سے کم پائے اس نے نماز نہیں پائی۔امام ابوحنیفہ رحمۃ اللہ علیہ مفہوم مخالف نہیں لیتے ہیں،کیونکہ ایک دوسری حدیث کے الفاظ اس مفہوم کے خلاف ہیں۔صحیحین میں حضرت ابوہریرہ رضی اللہ عنہ سے مروی ہے کہ نبی صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: "جب تم اقامت سنو تو نماز کی طرف چل دو،سکون اور وقار اختیار کرو،جلدی مت کرو،تو جو پا لو وہ پڑھ لو،اور جو رہ گئی ہو اسے پورا کرلو۔" [4] اس حدیث میں آپ نے نماز کے پا لیے جانے والے حصے کو "صلاۃ" فرمایا ہے۔الغرض امام ابوحنیفہ رحمۃ اللہ علیہ کا یہی مذہب ہے۔(محمد بن عبدالمقصود) سوال:اگر کوئی عورت اپنے ایام حیض میں حیا کے باعث نماز پڑھے تو کیا یہ جائز ہے؟ جواب:حائضہ کے لیے نماز پڑھنا جائز نہیں ہے۔رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کا فرمان ہے: [1] حضرت عبداللہ بن مسعود رضی اللہ عنہ کے فرمان میں((من ادرك من الجمعة ركعة))یعنی جس نے نماز جمعہ کی ایک رکعت پا لی کے الفاظ ہیں۔ دیکھیے المعجم الکبیر للطبرانی:9؍308،حدیث :9545،9546 والسنن الکبری للبیہقی:3؍304،حدیث:5531 و مسند ابن الجعد،ص:290،حدیث:1959 [2] صحیح بخاری ،کتاب مواقیت الصلاۃ،باب من ا درک من الصلاۃ رکعۃ،حدیث:555 و صحیح مسلم،کتاب المساجد و مواضع الصلاۃ،باب من ادرک رکعۃ من الصلاۃ،حدیث:607 و سنن ابی داود،کتاب الصلاۃ،ابواب الرکوع والسجود،باب فی الرجل یدرک الامام ساجدا،حدیث:893 [3] صحیح بخاری،کتاب مواقیت الصلاۃ،باب من ادرک من الصلاۃ رکعۃ،حدیث:580 و صحیح مسلم،کتاب المساجد،باب من ادرک رکعۃ من الصلاۃ،حدیث:607۔ سنن الترمذی ،کتاب الجمعۃ،باب ما جاء فیمن یدرک من الجمعۃ رکعۃ،حدیث:524 [4] صحیح بخاری،کتاب الاذان،باب لا یسعی الی الصلاۃ ولیاتھا بالسکینۃ والوقار،حدیث:636 و صحیح مسلم،کتاب المساجد،باب استحباب اتیان الصلاۃ بوقار و سکینۃ،حدیث:602 و سنن الترمذی،کتاب الصلاۃ،باب ما جاء فی المشی الی المسجد،حدیث:237 فضیلۃ الشیخ کے بیان کردہ الفاظ بخاری سے ماخوذ ہیں۔