کتاب: جنت و جہنم کے نظارے - صفحہ 51
اللہ تعالیٰ نے قرآن کریم میں جہنم کو ’’النار‘‘ (معرفہ) کے لفظ سے ایک سو چھبیس مرتبہ اور ’’ناراً‘‘ (نکرہ) کے لفظ سے انیس مرتبہ ذکر فرمایا ہے۔[1] (ب) جہنم: اللہ سبحانہ وتعالیٰ کا ارشاد ہے: ﴿ إِنَّ جَهَنَّمَ كَانَتْ مِرْصَادًا ﴿٢١﴾ لِّلطَّاغِينَ مَآبًا ﴾[2] بیشک جہنم گھات میں ہے۔ سرکشوں کا ٹھکانہ وہی ہے۔ (ج) جحیم: ارشاد باری ہے: ﴿ وَبُرِّزَتِ الْجَحِيمُ لِمَن يَرَىٰ ﴾[3] دیکھنے والے کے لئے جہنم ظاہر کی جائے گی۔ [1] دیکھئے: المعجم المفھرس لالفاظ القرآن الکریم، ص۷۲۳ تا ۷۲۵۔ [2] سورۃ النبأ:۲۱،۲۲۔ [3] سورۃ النازعات: ۳۶۔