کتاب: اجتماعی نظام - صفحہ 375
سالی کے ساتھ زنا سے بیوی کی زوجیت کا حکم السلام علیکم ورحمة اللہ وبرکاتہ کیا سالی کے ساتھ زنا کرنے سے بیوی کو طلاق ہو جاتی ہے۔؟ الجواب بعون الوہاب بشرط صحة السؤال وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاتہ! الحمد للہ، والصلاة والسلام علیٰ رسول اللہ، أما بعد! زنا ایک شنیع اور قبیح ترین جرم ہے ۔اس کے مرتکب کو اللہ تعالی سے توبہ کرنی چاہئے اور اپنے اس گناہ پر خلوص نیت سےمعافی مانگنی چاہئے۔ لیکن سالی کے ساتھ زنا سے بیوی کو طلاق واقع نہیں ہوتی ہے۔کیونکہ کسی بھی حرام فعل کے ارتکاب سے کوئی حلال فعل حرام نہیں ہوتا ہے۔ نبی کریم نے فرمایا: «لا یحرم الحرام الحلال»سنن ابن ماجہ » کتاب النکاح » باب لا یحرم الحرام الحلال(2015) حرام کام کسی حلال کو حرام نہیں کرتا ھذا ما عندی واللہ اعلم بالصواب فتوی کمیٹی محدث فتوی