کتاب: حج اور عمرہ کے مسائل - صفحہ 64
شُرُوْطُ أَلْحَجٍّ حج کی شرائط مسئلہ 36: مالدار‘ آزاد‘ عاقل‘ مسلمان مرد اور عورت پر حج فرض ہے۔ عَنْ عَلِیِّ رضی اللّٰهُ عنہ عَنِ النَّبِیِّ ا قَالَ (( رُفِعَ الْقَلَمُ عَنْ ثَلاَثَةٍ عَنِ النَّائِمِ حَتّٰی یَسْتَقِیْظَ وَعَنِ الصَّبِیِّ حَتّٰی یَحْتَلِمَ وَعَنِ الْمَجْنُوْنِ حَتّٰی یَعْقِلَ))رَوَاہُ اَبُوْدَاؤُدُ [1] (صحیح) حضرت علی رضی اللہ عنہ سے روایت ہے رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا ”تین شخص شرعی حکم کے مکلف نہیں ایک سویا ہوا یہاں تک کہ وہ بیدار ہو جائے‘ دوسرا بچہ یہاں تک کہ بالغ ہوجائے اور تیسرا مجنون یہاں تک کہ اس کا جنون ختم ہو جائے۔“ اسے ابو داؤد نے روایت کیا ہے۔ عَنِ ابْنِ عَبَّاسٍ رَضِیَ اللّٰہُ عَنْہُمَا قَالَ: قَالَ رَسُوْلُ اللّٰہِ صلی اللّٰهُ علیہ وسلم ((اَیُّمَا صَبِیٍّ حَجَّ ثُمَّ بَلَغَ الْحِنْثَ فَعَلَیْہِ اَنْ یَّحُجَّ حُجَّةً اُخْرٰی وَاَیُّمَا عَبْدٍ حَجَّ ثُمَّ اُعْتِقَ فَعَلَیْہِ اَنْ یَّحُجَّ حَجَّةً اُخْرٰی)) رَوَاہُ الطَّبْرَانِیُّ[2] حضرت عبداللہ بن عباس رضی اللہ عنہما کہتے ہیں رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا ”جو بچہ حج کرے پھر بالغ ہو جائے تو اسے استطاعت حاصل ہونے پر دوبارہ حج کرنا چاہئے اور جس غلام نے حج کیا پھر آزاد ہو گیا تو اسے (استطاعت حاصل ہونے پر) دوبارہ حج ادا کرنا چاہئے۔“ اسے طبرانی نے روایت کیا ہے۔ عَنِ عُمْرَ بْنِ الْخَطَّابَ رضی اللّٰهُ عنہ قَالَ بَیْنََا نَحْنُ عِنْدَ رَسُوْلِ اللّٰہِ صلی اللّٰهُ علیہ وسلم ذَاتَ یَوْمٍ اِذْ طَلَعَ عَلَیْنَا رَجُلٌ شَدِیْدٌ بَیَاضِ الثِّیَابِ شَدِیْدُ سَوَادِ الشَّعْرِ لاَ یُرَی عَلَیْہِ اَثَرُ السَّفَرِ وَلاَ یَعْرِفُہُ مِنَّا اَحَدٌ حَتّٰی جَلَسَ اِلٰی النَّبِیِّ ا فَاَسْنَدَ رُکْبَتَیْہِ اِلٰی رُکْبَتَیْہِ وَوَضَعَ کَفَّیْہِ عَلٰی فَخِذَیْہِ وَقَالَ یَا [1] کتاب الحدود ، باب فی المجنون او یصیب احدا. [2] فقۃ السنہ ، للسید سابق ، الجزء الاول 333.