کتاب: اپنے آپ پر دم کیسے کریں - صفحہ 131
عَلَیَّ وَ اَبُوْئُ بِذَنْبِیْ فَاغْفِرْلِیْ فَاِنَّہٗ لَایَغْفِرُ الذُّنُوْبَ اِلَّا اَنْتَ)) ’’ یا اللہ! آپ ہی میرے رب ہیں ۔ آپ کے سوا کوئی معبود برحق نہیں آپ نے مجھے پیدا کیا اور میں آپ کابندہ ہوں اور میں حسب طاقت آپ کے ساتھ عہد و وعدہ پر کاربند ہوں اور جو کچھ میں نے کیا اس کے شر سے آپ کی پناہ پکڑتا ہوں مجھے اپنے اوپرآپ کی نعمت کا اقرار ہے اور مجھے اپنے گناہ کا بھی اقرار ہے ؛مجھے معاف کر دے یقیناً آپ کے بغیر گناہ کو معاف کرنے والا کوئی نہیں ۔‘‘ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: جو شخص یقین کی حالت میں شام کے وقت یہ دعا پڑھے اور اسی رات فوت ہوجائے تو وہ شخص جنت میں جائے گا اور اسی طرح حالت ِ یقین میں جو شخص صبح کے وقت پڑھ لے اور شام کو فوت ہوجائے تو وہ بھی جنت میں جائے گا۔‘‘ [1] [توضیح:..... سید الاستغفار مغرب اور فجر کے وقت پڑھ لیں ]۔ ۱۵۔ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: جو شخص صبح وشام سو بار یہ کلمات کہے : ((سُبْحَانَ اللّٰہِ وَبِحَمْدِہٖ)) ’’میں پاکیزگی بیان کرتا ہوں اللہ تعالیٰ کی اس کی تعریفوں کے ساتھ۔‘‘ [1] البخاری(۶۳۲۳)۔