کتاب: اپنے آپ پر دم کیسے کریں - صفحہ 112
شیطان کو دیکھتے ہیں ۔‘‘[1] مطلب ہے کہ:(( اَعُوْذُ بِاللّٰہِ مِنَ الشَّیْطَانِ الرَّجِیْمِ )) پڑھو۔ ۲۔معوذتین(سورہ فلق اور سورہ الناس ) کی تلاوت : ٭ ﴿قُلْ اَعُوْذُبِرَبِّ الْفَلَقِ ﴾ ٭ ﴿قُلْ اَعُوْذُبِرَبِّ النَّاسِ﴾ حضرت ابوسعید خدری رضی اللہ عنہ سے روایت ہے: رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نظر بد اور شیطان سے پناہ مانگا کرتے تھے یہاں تک کہ معوذتین نازل ہوئیں توآپ نے باقی وظائف چھوڑ کر ان کواپنا وظیفہ بنالیا۔‘‘[2] ۳۔ آیت الکرسی پڑھنا: اَعُوْذُبِاللّٰہِ مِنَ الشَّیْطٰنِ الرَّجِیْمِ ﴿اَللّٰہُ لَا اِلٰہَ اِلَّا ھُوَ الْحَیُّ الْقَیُّوْمُ لَا تَأْخُذُہٗ سِنَۃٌ وَّلَا نَوْم لَہٗ مَا فیِ السَّمٰوٰتِ وَمَافِی الْاَرْضِ مَنْ ذَاالَّذِیْ یَشْفَعُ عِنْدَہٗ اِلَّا بِاِذْنِہٖ یَعْلَمُ مَابَیْنَ اَیْدِیْھِمْ وَ مَاخَلْفَھُمْ وَلَایُحِیْطُوْنَ بِشَیْیئٍ مِنْ عِلْمِہٖ اِلَّا بِمَا شَآء وَسِعَ کُرْسِیُّہُ السَّمٰوٰتِ وَالْاَرْضَ [1] ابو داؤد(۵۱۰۳) مسند احمد(۳؍۳۰۶) [2] صحیح الترمذي(۲۰۵۸)۔