کتاب: اگر تم مومن ہو - صفحہ 134
الْخَالِصُ﴾ [الزمر:2…3] ’’ یقینا ہم نے اس کتاب کو آپ کی طرف حق کے ساتھ نازل فرمایا ہے پس آپ اﷲہی کی عبادت کریں دین کو اس کیلئے خالص کرتے ہوئے ۔ خبردار!اﷲتعالیٰ کیلئے (قابلِ قبول) صرف دین خالص ہے۔‘‘ 2۔ اﷲکے دین کو مکمل طور پر اختیار کرنا: دین پہ قائم ہونے کے حوالے سے اﷲکا دوسرا حکم یہ سامنے آتا ہے کہ اہل ایمان اﷲکے ایک بھی حکم کو چھوڑے بغیر تمام احکامات کی اطاعت کریں یوں اﷲکی اطاعت میں پورے کے پورے داخل ہو جائیں جیسا کہ اﷲتعالیٰ کا ارشاد ہے کہ: ﴿ یٰآیُّھَا الَّذِیْنَ اٰمَنُوْا دْخُلُوْا فِی السِّلْمِ کَآفَّۃً وَّلَا تَتَّبِعُوْا خُطُوٰتِ الشَّیْطٰنِ اِنَّہٗ لَکُمْ عَدُوٌّ مُّبِیْنٌ﴾ [البقرہ:208] ’’ اے ایمان والو!تم اسلام میں پورے کے پورے داخل ہو جاؤ اور شیطان کے نقش قدم کی پیروی مت کرو، حقیقت یہ ہے کہ وہ تمہارا کھلا دشمن ہے﴾ 3۔ اﷲکے دین کو بغیر کسی مبالغے کے اختیار کرنا: اﷲتعالیٰ کا ارشاد ہے کہ: ﴿ قُلْ یَاَھْلَ الْکِتٰبِ لَا تَغْلُوْا فِی دِیْنِکُمْ غَیْرَ الْحَقِّ وَلَا تَتَّبِعُوْا اَھْوَآئَ قَوْمٍ قَدْ ضَلُّوْا مِنْ قَبْلُ وَاَضَلُّوْا کَثِیْرًا وَضَلُّوْا عَنْ سَوَآئِ السَّبِیْلِ﴾ ’’ اے اہل کتاب اپنے دین میں ناحق مبالغہ نہ کرو اور ان لوگوں کی اھواء کی پیروی مت کرو جو تم سے پہلے خود بھی گمراہ ہوئے اور بہت سوں کو بھی گمراہ کر گئے تھے اور