سورة الانعام - آیت 66

وَكَذَّبَ بِهِ قَوْمُكَ وَهُوَ الْحَقُّ ۚ قُل لَّسْتُ عَلَيْكُم بِوَكِيلٍ

ترجمہ ترجمان القرآن - مولانا ابوالکلام آزاد

اور (اے پیغبر) تمہاری قوم نے اس (قرآن) کو جھٹلایا ہے، حالانکہ وہ بالکل حق ہے۔ تم کہہ دو کہ : مجھ کو تمہاری ذمہ داری نہیں سونپی گئی (٢٤)

تفسیر تیسیر الرحمن لبیان القرآن - محمد لقمان سلفی صاحب

(61) اس کے بعد آیت (67) میں فرمایا گیا کہ اللہ ککے ہر فیصلہ کے وقوع پذیر ہونے کا ایک وقت مقرر ہے، اور میں نے تمہیں قرآن اور رسول کی تکذیب اور شرک کا نجام بتادیا ہے کہ تمہیں ایک دن عذاب آدپو چے گا، چناچہ میدان بدر میں اس خبر کی تصدیق ہوگئی۔