کتاب: دنیوی مصائب و مشکلات حقیقت ، اسباب ، ثمرات - صفحہ 46
پھر ایک شخص کو لایا جائے گا جو جنت کا مستحق ہوگا،لیکن وہ اس دنیا میں بہت تنگی میں زندگی گزارکر آیا ہوگا، اس کو صرف ایک لمحہ بھر کیلئے جنت میں داخل کیا جائے گا۔اور پوچھا جائے گا:اے ابن ِآدم!کیا تم نے دنیا میں کوئی تکلیف اٹھائی؟ یا کوئی تنگی محسوس کی؟وہ کہے گا:اے اللہ !نہیں میں نے کوئی تکلیف یا رنج ہر گز محسوس نہیں کیا۔‘‘