کتاب: دعوت دین کِسے دیں؟ - صفحہ 140
حدیث سے معلوم ہونے والی دیگر دو باتیں: ۱: دعوتِ دین کا دینا کسی جگہ میں محصور نہ ہونا، جہاں بھی موقع میسر ہو، دعوتِ دین دی جائے گی۔ ۲: مخاطب لوگوں کی طرف سے بدسلوکی کا سامنا کرنے کے لیے داعی کو ذہنی طور پر قبل از وقت تیار رہنا چاہیے۔ (۷) مجوسیوں کو دعوتِ دین نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم نے مجوسیوں کو بھی دعوتِ اسلام دی۔ امام بخاری نے حضرت ابن عباس رضی اللہ عنہما سے روایت نقل کی ہے، کہ: ’’یقینا رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے عبد اللہ بن حذافہ السہمی رضی اللہ عنہ کے ہاتھ ایک مکتوب کسری کے نام بھیجا اور انہیں حکم دیا، کہ وہ اسے بحرین کے گورنر کو دے دیں۔ بحرین کے گورنر نے وہ مکتوب کسری کو دیا۔ جب کسری نے اس کو پڑھا، تو اس کے ٹکڑے ٹکڑے کردیے۔ میرا خیال ہے، کہ ابن المسیب نے بیان کیا: ’’رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے ان کے لیے بدعا کی، کہ ان کے ٹکڑے ٹکڑے ہوجائیں۔